ترقیاتی بجٹ کا تخمینہ 701 ارب، فاٹا کو وفاق 73 ارب دے گا، کراچی کے لئے 34 ارب مختص

اسلام آباد: وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی خسرو بختیار نے کہا ہے کہ ترقیاتی بجٹ کا تخمینہ 701 ارب روپے ہے.

ان خیالات کا اظہار انھوں نے ایک خصوصی پریس کانفرنس میں کیا. وزیر منصوبہ بندی خسرو بختیار نے کہا کہ اس سال فاٹا کو وفاق 73  ارب روپے دے گا.

خسرو بختیار نے کہا کہ بلوچستان میں 76 ارب روپےکے پراجیکٹس لےکر آرہے ہیں، کے پی میں 48 ارب روپے کے پراجیکٹس لگیں گے.شہر کراچی کے لئے 45 پراجیکٹس ہیں، جن کے لیے 34 ارب روپے مختص کئے گئے ہیں.

وزیرمنصوبہ بندی کا کہنا تھا کہ 8 ارب روپے کے نئے منصوبے اسلام آباد کے لئے ہیں، اس وقت بجلی کے شعبے میں ٹرانسمیشن کاچیلنج ہے، بجلی کی مد میں 80 ارب روپے مختص کئے ہیں.

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ ایگری کلچرکے لئے گزشتہ سال 1 ارب رکھے گئے تھے، اس سال 12 ارب مختص کیے گئے ہیں، جب کہ گرین کلین منصوبے کے لئے 9.5 ارب روپے رکھے ہیں.

خیال رہے کہ 11 جون 2019 کو پی ٹی آئی کی حکومت نے اپنا پہلا بجٹ پیش کیا تھا، بجٹ کا حجم 70.22 کھرب روپے رکھا گیا، ترقیاتی کاموں کے لیے 1800 ارب روپے مختص کیے گئے، جب کہ ٹیکس وصولیوں کا ہدف 550 ارب رکھا گیا ہے۔ وفاقی بجٹ کا خسارہ 3560ارب روپے تھا۔

Comments

comments