تین ممالک پر چوبیس گھنٹے بھاری، کرونا کے ایک لاکھ 9 ہزار کیسز رپورٹ

واشنگٹن / نئی دہلی / برازیلا: امریکا، برازیل اور بھارت میں چوبیس گھنٹوں کے دوران کرونا کے 1 لاکھ 9 ہزار سے زائد  کیسز  سامنے آگئے۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹ کے مطابق گزشتہ برس دسمبر میں چین کے شہر ووہان سے پھیلنے والے وائرس کی دنیا بھر میں تباہ کاریاں جاری ہیں ۔

رپورٹ کے مطابق دنیا بھر میں کرونا سے متاثرہ افراد کی تعداد 97 لاکھ تک پہنچ گئیجبکہ ہلاکتوں کی تعداد اضافے کے بعد 4 لاکھ 97 ہزار سے تجاوز کرچکی ہے۔

امریکا میں ایک روز میں 45 ہزار کرونا کے کیسز رپورٹ ہوئے جبکہ برازیل میں چوبیس گھنٹوں کے دوران 46 ہزار اور بھارت میں اٹھارہ ہزار شہریوں میں وائرس کی تصدیق ہوئی۔

ڈبلیو ایچ او نے کرونا کیسز کی تعداد میں اضافے کی وجہ لاک ڈاؤن میں نرمی کو قرار دیا۔ عالمی ادارہ صحت کے ترجمان نے ایک بار پھر زور دیا کہ کرونا تیزی سے پھیل رہا ہے، تمام ممالک لاک ڈاؤن میں نرمی کے حوالے سے کیے جانے والے فیصلے پر نظر ثانی کریں‘۔

یاد رہے کہ گزشتہ دنوں عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کے سربراہ نے خبردار کیا تھا کہ اگر دنیا بھر میں کرونا کے کیسز کی تعداد ایک کروڑ تک پہنچ گئی تو جان بچانے والی آکسیجن کی قلت پیدا ہوجائے گی۔

انہوں نے بتایا تھا کہ کرونا تاحال بہت تیزی سے پھیل رہا ہے، تمام ممالک کو اس کی روک تھام کے لیے اقدامات کرنا ہوں گے، ایک ہفتے کے دوران رپورٹ ہونے والے کیسز کی تعداد چار گنا بڑھ گئی ہے۔

0

20

Comments

comments