ذیابیطس کے مریض دلیا، سبزیاں اور مچھلی کا استعمال کریں، ماہرین

کراچی: طبی ماہرین نے ذیابیطس کے مرض میں مبتلا مریضوں کو مشورہ دیا ہے کہ وہ دلیا، سبزیاں اور مچھلی کا استعمال کریں۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق ذیابیطس کی دونوں اقسام میں خون میں شوگر کی سطح کو نارمل رکھنے کےلیے سب سے اہم چیزغذائی احتیاط ہے جس کے بغیر ذیابیطس پر قابو پانا ممکن نہیں۔

برصغیر میں ذیابیطس کا مرض تیزی سے پھیل رہا ہے اور مریضوں کی جانب سے جو سوال سب سے زیادہ پوچھا جاتا ہے وہ یہی ہے کہ وہ کون کونسی غذا کھا سکتے ہیں اور کونسی نہیں۔

طبی ماہرین کے ذیابیطس کے مریضوں کو دلیا، سبزیاں اور مچھلی کھانے کا مشورہ دے دیا، ماہرین کے مطابق یہ گردوں کی بیماری کے خلاف بھی تحفظ فراہم کرتی ہے۔

طبی ماہرین کا کہنا تھا کہ پالک، گوبھی اور سلاد کے پتے جیسی ہری سبزیوں کے استعمال سے ذیابیطس ہونے کا خطرہ 14 فیصد تک کم ہوجاتا ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ بھوسی کے حامل آٹے سے بنی چپاتی، ذیابیطس کے مریضوں کے لیے زیادہ مفید ہے تاہم اگر بیسن کی روٹی کو غذا میں شامل کرلیا جائے تو یہ بھوسی والی روٹی سے بھی زیادہ سود مند ثابت ہوگی۔

طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ چاول اور روٹی معمول کی غذا کے لازمی اجزا ہیں اس لیے شوگر کے مریض ہمیشہ چاول یا روٹی میں سے کسی ایک کے انتخاب میں تذبذب کا شکار رہتے ہیں لیکن ماہرین کے ان غذائی ہدایات پر عمل کریں مرض پر قابو پایا جاسکتا ہے۔

0

20

Comments

comments