موسم گرما کرونا وائرس کا پھیلاؤ کم کرسکتا ہے؟

حال ہی میں کی جانے والی ایک تحقیق میں اس بات کی جانچ پڑتال کی گئی کہ موسم گرما کرونا وائرس پر کس طرح اثر انداز ہوتا ہے، ماہرین نے دیکھا کہ کھلے اور گرم موسم میں وائرس کے پھیلنے کی شرح کم تو ہوجاتی ہے مگر یہ شرح نہایت معمولی ہے۔

بین الاقوامی ویب سائٹ کے مطابق انگلینڈ میں حکومتی ہنگامی حالات سائنسی مشاورت گروپ نے کرونا وائرس کے پھیلاؤ سے متعلق اپنے تحقیقی کاموں میں اس پہلو کی تحقیق کی ہے کہ آیا گرم موسم وائرس کے پھیلاؤ کو روکتا ہے یا نہیں۔

ادارے سے منسلک پروفیسر جون ایڈمنڈز نے کہا ہے کہ موصول شواہد نے سخت گرمی کے وائرس پر منفی اثرات کو ثابت کیا ہے تاہم یہ اثرات بہت کم ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کھلے ماحول میں وائرس سے متاثر ہونے کا خطرہ کم ہے، وائرس زیادہ تر بند مقامات سے پھیلتا ہے۔ اگر باہر سورج چمک رہا ہو تو وائرس زیادہ جلدی ہلاک ہو جاتا ہے، ہلاک نہ بھی ہو تو کم پھیلتا ہے۔

پروفیسر کا کہنا تھا کہ سورج کی الٹرا وائلٹ شعائیں وائرس کو ہلاک کر دیتی ہیں تاہم اس کی شرح نہایت کم ہوتی ہے۔

Comments