جب بھی ڈیل یا این آر او ہوا تو فائدہ پیپلزپارٹی اور ن لیگ کو ملا، شہزاد اکبر

وزیراعظم عمران خان کے مشیر برائے داخلہ و احتساب شہزاد اکبرکا کہنا ہےکہ جب بھی ڈیل یا این آر او ہوا فائدہ پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ ن کو ملا۔

 شہزاد اکبرکا کہنا ہےکہ 20 سال پہلے معاہدے کے تحت 200 افراد کی فہرست بنائی گئی، جب بھی ڈیل یا این آر او ہوا فائدہ پیپلزپارٹی اور ن لیگ کو ملا، شریف خاندان نے پہلی ڈیل مشرف کے ساتھ کی اورباہر چلے گئے، پیپلزپارٹی اورن لیگ میں کوئی فرق نہیں،دونوں نے لوٹ مارکی۔

مزید پڑھیں

 مشیر احتساب کا کہنا ہےکہ یہ بحث الگ ہے کہ براڈشیٹ نے قومی احستاب بیورو (نیب) کی معاونت کی یا نہیں ، براڈشیٹ کے ذریعے بھی سیاسی اشرافیہ بے نقاب ہوئی ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ میں  مذاکرات کا حصہ رہا ہوں، اپوزیشن نے فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) بل  پر عوام کے لیے کوئی ریلیف نہیں مانگا،صرف نیب قوانین کوختم کرنے کی بات کی، یہ لوگوں اپنا ذاتی تحفظ چاہتےہیں۔