چیلنجز سے نمٹنے کیلئے ریاستی اداروں کا مضبوط ہونا ضروری ہے، آرمی چیف

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا ہے کہ اندرونی وبیرونی چیلنجز جامع قومی حکمت عملی کے متقاضی ہیں، پاک فوج ملکی سلامتی و دفاع کے لیے پرعزم ہے۔

انٹرسروسز پبلک ریلیشنز (آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی( این ڈی یو) اسلام آباد کا دورہ کیا اور نیشنل سیکیورٹی اینڈ وار کورس کے شرکاء سے خطاب کیا۔

مزید پڑھیں

آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف نے شرکاء سے اپنے خطاب میں قومی سلامتی کو درپیش اندرونی و بیرونی چیلنجز کو اجاگر کیا اور پاکستان میں پائیدار امن کے حوالے سے اپنا وژن پیش کیا۔

اس موقع پر آرمی چیف کا کہنا تھا کہ اندرونی وبیرونی چیلنجز جامع قومی حکمت عملی کے متقاضی ہیں اور ان چیلنجز سے نمٹنے کے لیے ریاستی اداروں کا مضبوط ہونا ضروری ہے۔

آرمی چیف کا کہنا تھا کہ ملک میں دیرپااقتصادی و سماجی ترقی محفوظ ماحول سے جڑی ہے اور پاک فوج محفوظ ماحول کے لیے ضروری ہر ممکن کوشش کرتی رہےگی۔

آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف نے خطے کی سلامتی کی صورت حال پر اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ پاک فوج ملکی سلامتی و دفاع کے لیے پر عزم ہے اور قومی حمایت سے اپنے فرض کی ادائیگی جاری رکھے گی۔